Web Analytics
تازہ ترین خبر
ہوم / آف دی فیلڈ / لندن میں تمیم اقبال اوربیوی پرتیزاب پھینکنے کی کوشش

لندن میں تمیم اقبال اوربیوی پرتیزاب پھینکنے کی کوشش

انگلینڈمیں مسلمانوں کے خلاف بڑھتی نفرت کے سبب ناخوشگوار واقعات میں تیزی سے اضافہ ہورہاہے۔ابھی مسلمان خاتون پرتیزاب پھینکنے کا معاملہ ٹھنڈانہیں ہواتھا کہ بنگلہ دیشی کرکٹر تمیم اقبال اور اُ س کی بیوی پربھی لندن میں تیزاب پھینکنے کی کوشش کی گئی ہے تاہم بنگلہ دیشی کرکٹر نے اس کی تردید کردی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بنگلا دیشی کرکٹر تمیم اقبال اور ان کے اہل خانہ پر مبینہ طور پر تیزاب سے حملہ کرنے کی کوشش کی گئی جس کے بعد وہ کاؤنٹی کرکٹ ادھوری چھوڑ کر وطن واپس بنگلہ دیش چلے گئے۔

انٹرنیشنل کرکٹ میں بنگلہ دیش کی جانب سے سب سے زیادہ ون ڈے رنز اسکور کرنے والے تمیم اقبال نے چند روز قبل ہی انگلش کاؤنٹی ٹیم ایسکس کو جوائن کیا تھا اور انہیں ٹی ٹوئنٹی بلاسٹ کمپیٹیشن میں ایسکس کی جانب سے 8 میچز کھیلنے تھے تاہم وہ صرف ایک میچ کھیلنے کے بعد ہی وطن واپس آگئے۔

یہ بھی پڑھیں:  دھونی کی سرفرازکے بیٹے کے ساتھ تصویر کی حقیقت کھل گئی

بنگلا دیش کے صف اول کے انگریزی اخبار دی ڈیلی اسٹار نے ذرائع کے حوالے سے خبر دی تھی کہ تمیم اقبال لندن میں اپنی اہلیہ عائشہ صدیقہ اور ایک سالہ بیٹے کے ساتھ ڈنر کے لیے جا رہے تھے جہاں انہیں نفرت انگیز حملے کا سامنا کرنا پڑا اور مشتبہ حملہ آور نے ان پر تیزاب پھینکنے کی بھی کوشش کی۔

بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ کے ایک عہدے دار نے خبررساں ایجنسی کو بتایا کہ تمیم اقبال نے لندن میں اپنے اور اہل خانہ کے ساتھ پیش آنے والے واقعے کے بعد وطن واپسی کا فیصلہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ممکنہ طور پر حملہ آوروں نے تمیم اقبال کی فیملی کا پیچھا اس لیے کیا ہو گا کیوں کہ تمیم کی اہلیہ حجاب کرتی ہیں، البتہ کرکٹر کے واپس آنے کے بعد ہی مزید تفصیلات معلوم ہوسکیں گی۔

علاوہ ازیں خود تمیم اقبال نے اپنی فیملی پر تیزاب حملے کی خبر میڈیا پر آنے کے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر اپنی واپسی کی وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ انگلینڈ سے ان کی واپسی ذاتی وجوہات کی بناء پر ہوئی اور اس حوالے سے میڈیا پر چلنے والی خبروں میں کوئی صداقت نہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ انگلینڈ میرے پسندیدہ مقامات میں سے ایک ہے اور ایسکس کے لیے کھیلنا اعزاز کی بات ہے۔ ایسکس کاؤنٹی کلب کی جانب سے جاری بیان کہا گیا ہے کہ وہ تمیم اقبال کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار کرتے ہیں اور ان کی نجی زندگی کا احترام کیا جانا چاہیئے۔

دوسری جانب،ذرائع کا کہناہے کہ تمیم اقبال واقعے کو اس لئے چھپانے کی کوشش کررہے ہیں کیونکہ وہ وہاں کائونٹی کرکٹ میں اپنا کیریئرجاری رکھنا چاہتے ہیں۔

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

سگی بیٹیوں سے جنسی زیادتی کے ملزم چاچا ٹی 20 کی ویڈیومنظرعام پر آگئی

پاکستان کرکٹ ٹیم کے بڑے سپورٹرکے طورپرپہچانے جانے والے محمد زماں عرف چچا ٹوئنٹی20 اپنی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے